ٹیکنالوجیخبریں

ٹک ٹاک نے پاکستانیوں کی 2 کروڑ سے زائد ویڈیوز ڈیلیٹ کردیں

ویڈیو شیئرنگ ایپلی کیشن 'ٹک ٹاک' نے 2024 کے پہلے تین ماہ کے دوران پاکستانی صارفین کی 2 کروڑ سے زائد ویڈیوز حذف کر دیں۔

حکومتی درخواست پر 93 فیصد ویڈیوز حذف

کمپنی کی جانب سے جاری کردہ رپورٹ میں بتایا گیا کہ ٹک ٹاک پر روزانہ کروڑوں ویڈیوز اَپ لوڈ ہوتی ہیں، جن کے مواد کی جانچ پڑتال کمیونٹی گائیڈ لائنز کے تحت کی جاتی ہے۔

اسی حوالے سے ٹک ٹاک نے 2024 کی پہلی سہ ماہی کے لیے کمیونٹی گائیڈ لائنز کے نفاذ کی رپورٹ جاری کی ہے۔

رپورٹ کے مطابق، جنوری سے مارچ کے دوران دنیا بھر میں 16 کروڑ 69 لاکھ 97 ہزار 307 ویڈیوز حذف کی گئیں، جن میں کمیونٹی گائیڈ لائنز کی خلاف ورزی کی گئی تھی۔

ٹک ٹاک کا تمام اے آئی ویڈیوز پر لیبل لگانے کا اعلان
یہ تعداد اس عرصے میں ٹک ٹاک پر پوسٹ کی جانے والی مجموعی ویڈیوز کے 0.9 فیصد کے برابر ہے۔

ٹک ٹاک انتظامیہ کا کہنا ہے کہ اسی عرصے کے دوران پاکستان سے اَپ لوڈ کی جانے والی 2 کروڑ 2 لاکھ 7 ہزار سے زائد ویڈیوز بھی حذف کر دی گئیں۔

اس سہ ماہی کے دوران ٹک ٹاک نے پہلی بار ‘کمنٹ سیفٹی ٹولز’ استعمال کرتے ہوئے 97 کروڑ 64 لاکھ سے زائد تبصروں کو حذف اور فلٹر کیا۔

ٹک ٹاک نے 13 سال سے کم عمر صارفین کے 2 کروڑ 16 لاکھ 39 ہزار 414 اکاؤنٹس بھی حذف کر دیے۔

کمپنی نے اسپام اکاؤنٹس اور متعلقہ مواد کو بھی ہدف بنایا اور خودکار طریقے سے اسپام اکاؤنٹس کو آئندہ بننے سے روکنے کے لیے احتیاطی اقدامات کیے۔

آپ کا ردعمل کیا ہے؟

متعلقہ اشاعت

Qalam Kahani We would like to show you notifications for the latest news and updates.
Dismiss
Allow Notifications